تاریخ

مسلمانوں پر مظالم کی کہانیاں ۔تیسرا حصہ

مسلمانوں پر مظالم کی کہانیاں ۔تیسرا حصہ

نئیر خان عراق اور افغانستان کی جنگیں عراق اور افغانستان میں امریکی اور مغربی فوجی کاروائیاں اب مسلمانوں کی اہل مغرب کے خلاف رنجش کا مرکزی نقطہ بن چکی ہیں۔ روائتی فلسطینی مسئلہ عارضی طور پر پس منظر میں چلا گیا ہے۔ اسلامسٹ اور سوشلسٹ مبصروں نے میڈرڈ او رلندن(7/7) میں ہونے والی دہشت گرد کارروائیوں کا اصل سبب انہیں […]

· 0 comments · تاریخ
توہین رسالت کے قانون کا پس منظر

توہین رسالت کے قانون کا پس منظر

محمد اسماعیل قریشی ایڈووکیٹ مسلمان اپنے آقا ومولا حضور سرور عالم صلی اللہ علیہ وسلم کے نام وناموس پر مرمٹنے اور اس کی خاطر دنیا کی ہر چیز قربان کرنے کو اپنی زندگی کا ماحصل سمجھتے ہیں۔ اس پر تاریخ کی کسی جرح سے نہ ٹوٹنے والی ایسی شہادت موجود ہے جو ایک مسلمہ حقیقت بن چکی ہے۔ اس لئے […]

· 2 comments · تاریخ
مسلمانوں پر مظالم کی کہانیاں ۔ دوسرا حصہ

مسلمانوں پر مظالم کی کہانیاں ۔ دوسرا حصہ

نئیر خان مظلوم نما ظالم اس مضمون کے پہلے حصے میں اس بات کی وضاحت کی جاچکی ہے کہ اقوام عالم نے مشرق وسطیٰ میں دو ریاستی فارمولے کو وہاں رہنے والے یہودی اور عربوں کے لئے ایک قابل عمل حل قرار دیا تھا۔ عربوں نے اس فارمولے کو رد کیا اور اسرائیل پہ چڑھ دوڑے۔ بجائے پُر امن بقائے […]

· 1 comment · تاریخ
پاکستانی سرکار نے پشتون قوم کے سب سے بڑے نظم گو شاعر اور سياسی مبارز کو پاگل قرار ديا تها

پاکستانی سرکار نے پشتون قوم کے سب سے بڑے نظم گو شاعر اور سياسی مبارز کو پاگل قرار ديا تها

خان زمان کاکڑ پاکستانی سرکار نے پشتون قوم کے سب سے بڑے نظم گو شاعر اور سياسی مبارز کو پاگل قرار ديا تها! پاکستان کے رياستی تاريخی بيانيے کی بات ہم نہیں کرتے وه تو حملہ آوروں اور آمروں کی شان ميں بڑے غيرمعاشرتی ذ ہنوں کے تخليق کيے ہوئے قصائد کا ايک بڑا بدنام مجموعہ ہے پاکستان میں جو […]

· 16 comments · تاریخ
قائداعظم سیکولر ازم چاہتے تھے یا تھیا کریسی

قائداعظم سیکولر ازم چاہتے تھے یا تھیا کریسی

سید نصیر شاہ فرانس کے انقلابی ادیب اور نظریہ ساز مفکر روسو سے یہ قول منسوب ہے۔ ’’میں تمہاری بات کے ایک ایک لفظ کو غلط سمجھتا ہوں لیکن میں اس امر پر جان قربان کرنے کو بھی تیار ہوں کہ تمہیں یہی بات آزادانہ کہنے کا حق حاصل رہے‘‘۔ اہل علم کہتے ہیں کہ یہ قول روسو کا نہیں […]

· 2 comments · تاریخ
ولی کامل حضر ت مولانا محمد علی جناح المعروف قائد اعظم

ولی کامل حضر ت مولانا محمد علی جناح المعروف قائد اعظم

سید نصیر شاہ ڈاکٹرصفدر محمود صاحب نے اپنے مضمون ( روزنامہ ’’جنگ‘‘ لاہور29اکتوبر2011ء صفحہ نمبر6) کو ذیلی عنوان دیا ہے’’ایک اہم تاریخی راز سے پردہ اٹھتا ہے‘‘ ۔ڈاکٹر صفدر محمود جیسے خود ساختہ محققین اسی طرح کی بازی گری سے تاریخ کا پلستر بگاڑتے چلے آتے ہیں عجیب اور چونکادینے والے عنوانات دے کر او رسرخیاں جماکر’’دیتے ہیں دھوکا یہ […]

· 9 comments · تاریخ
مسلمانوں پر مظالم کی کہانیاں ۔ پہلا حصہ

مسلمانوں پر مظالم کی کہانیاں ۔ پہلا حصہ

نئیرخان مسلمان ، خواہ ناخواندہ ہوں یا تعلیم یا فتہ، اعتدال پسند ہوںیا انتہاپسند، ایک بات پر متفق ہیں، اُس پر یقین رکھتے ہیں اور ہر دم اور ہر سطح پر اُسی کا راگ الاپتے رہتے ہیں اور وہ بات یہ ہے کہ وہ ساری دُنیا میں خواہ وہ امریکہ ہو یا یورپ، آسٹریلیا ہو یا فلپائن، بھارت ہو یاچین(سنکیانگ)، […]

· 4 comments · تاریخ
شیخ ایاز ، حمیدہ کھوڑو اور میں

شیخ ایاز ، حمیدہ کھوڑو اور میں

ڈاکٹر مبارک علی ستمبرکا مہینہ اور 1972کا سال تھا کہ ہم جرمنی سے پاکستان آئے۔ کراچی ایر پورٹ پر آئے تو ایک افراتفری کا عالم تھا ۔ بڑی مشکلوں سے سامان لیا ۔باہر آئے۔سخت گرمی تھی ۔حبس علیحدہ سے ،وہاں سے چلے تو حیدر آباد ۔حیدر آباد کا حال کراچی سے زیادہ خراب تھا ۔سڑکیں نہ صرف کہ ٹوٹی ہوئی […]

· 1 comment · تاریخ
Au cours d'une conférence historique à New-Delhi le 3 juin 1947, Lord MOUNTBATTEN et les principaux leaders des Indes concluent la partition des Indes suivant le plan britannique. Pendant la conférence à New-Delhi de gauche à droite : Pandit JAWAHARLAL NEHRU, vice-président du gouvernement par intérim, Lord ISMAY, conseiller de Lord MOUNTBATTEN vice-roi des Indes, Lord MOUNTBATTEN et Ali JINNAH, président de la ligue musulmane pour les Indes.

کیا پاکستان جمہوری عمل سے بنا؟

تبصرہ : لیاقت علی ایڈووکیٹ کیاپاکستان کا قیام جمہوری عمل کا نتیجہ تھا یا کسی ساز با ز کا ؟ یہ سوال وقفے وقفے سے ہمارے ہاں کچھ افراد اٹھاتے رہتے ہیں ۔ یہ سوال اٹھانے والوں کے نزدیک متحدہ ہندوستان کی تقسیم اور پاکستان کا قیام دراصل برطانوی سرکار کے بین الاقوامی اور علاقا ئی معاشی وسیاسی مفادات کو […]

· 1 comment · تاریخ
مشرقی پاکستان میں فوجی آپریشن

مشرقی پاکستان میں فوجی آپریشن

میجر جنرل خادم حسین راجہ ( 1922-1999) مارچ 1971میں جی ۔ او ۔ سی ڈھاکہ تھے ۔ مشرقی پاکستان کس طرح بنگلہ دیش بنا اس کے وہ چشم دید گواہ تھے ۔ 26۔ مارچ 1971کو جو فوجی ایکشن ہوا ، اس کا منصوبہ ا ن کے بقول انھوں نے میجر جنرل راؤ فرمان علی کے اشتراک سے تیار کیا تھا […]

· 1 comment · تاریخ
جلاوطنی کے درد سے آشنائی

جلاوطنی کے درد سے آشنائی

ترجمہ و اضافہ : رزاق سربازی میں جہاں جاتا ہوں، جرمنی میرے ساتھ ہے۔ میرا وجود جرمن ثقافت کو اپنے ساتھ لئے پھرتا ہے۔ جرمن ادیب توماس مان اپنی دھرتی سے بچھڑ کر جس درد سے آشنا ہوئے ، وہ جلاوطنی تھی۔ ایک روحانی کینسر ۔۔۔۔۔۔ اپنی جڑوں سے کٹ جانے کی وہ اذیت جسے کسی درماں سے سکون نہ ملے۔ […]

· 0 comments · تاریخ
چند تاریخی غلط فہمیاں

چند تاریخی غلط فہمیاں

ڈاکٹر مبارک علی تاریخ اور تاریخی واقعات کو بیان کرتے وقت مورخ اپنے ذاتی خیالات کے ساتھ ساتھ معاشرے کے رحجانات کی بھی عکاسی کرتا ہے اگر تاریخی واقعات میں کئی اختلاف ہوں یا ان کا بنیادی اخلاقیات سے تصادم ہو تو ایسے موقعوں پر وہ اپنے نقطہ نظر کو صحیح ثابت کرنے کے لئے مختلف تاویلیں پیش کرتا ہے […]

· 1 comment · تاریخ
خپل قام خپلہ پارٹی: ایک نظریہ ایک عظیم سیاسی فلسفہ

خپل قام خپلہ پارٹی: ایک نظریہ ایک عظیم سیاسی فلسفہ

تحریر: عبدالحئی ارین یہ ہماری تاریخ کا ایک بہت ہی نمایاں باب ہے ۔ ہماری مٹی نے ایسے بیٹوں کو بھی جنم دیا ہے جو اپنے وطن قوم اور انکے دفاع و استقلال کیلئے اپنے سر کو ہتھیلی پر رکھ کرکشور مادر کا دفاع کرتے ارہے ہیں جن میں روشنا ئی تحریک کے بانی بایزید روشان اور اس طرح ایمل […]

· 0 comments · تاریخ
علامہ اقبال اور آفتاب اقبال: باپ اور بیٹے کی کشیدہ تعلقات کی کہانی

علامہ اقبال اور آفتاب اقبال: باپ اور بیٹے کی کشیدہ تعلقات کی کہانی

ڈاکٹر سیدتقی عابدی آفتاب اقبال علامہ اقبال کے بڑے بیٹے تھے جو 1899ء میں پنڈدادن خان ضلع شاہ پور میں پیدا ہوئے۔ ان کی ماں علامہ کی پہلی بیوی کریم بی بی تھیں جن سے علامہ کی شادی1893ء میں ہوئی ۔ کریم بی بی علامہ کے انتقال کے آٹھ سال بعد1946ء میں گجرات میں فوت ہوئیں اور وہیں مدفون ہیں۔ […]

· 4 comments · تاریخ
فیض صاحب

فیض صاحب

شاہد احمد دہلوی کوئی تیس سال پہلے کا ذکر ہے کہ دلی میں سجاد ظہیر ایک دفعہ آئے تو ڈاکٹر اخترحسین رائے پوری کی معرفت مجھ سے ملنے کے خواہشمند ہوئے۔ کتاب ’’انگارے‘‘ شائع ہوکر ضبط ہوچکی تھی۔ یہ ساجھے کی ایک باؤلی ہنڈیا تھی جو ادب کے چوراہے پر پھوٹی تھی۔ اس کے ایک ساتھی سجاد ظہیر بھی تھے […]

· 0 comments · تاریخ
نیا یورپ اور وقت کے تقاضے

نیا یورپ اور وقت کے تقاضے

خالد تھتھال جمیعت علما اسلام ہند کا پیرس حملوں کے خلاف احتجاج ناروے میں موجود ایک سابقہ پاکستانی ہونے کے ناطے مجھے ہمیشہ گلہ رہا کہ ہمارے ساتھ ایسا امتیازی سلوک کیوں روا رکھا جاتا ہے کہ اگر کوئی مسلمان انفرادی طور کسی غلط کام میں ملوث پایا جائے تو نزلہ تمام مسلمانوں یا اسلام پر گرتا ہے۔ جبکہ کوئی […]

· 0 comments · تاریخ
فیض :شخصیت کی چند جھلکیاں

فیض :شخصیت کی چند جھلکیاں

حمید اختر فیضؔ کے متعلق گفتگو کے دوران ایک دفعہ ایک نامور مغنیہ نے مجھ سے کہا تھا کہ میں فیضؔ پر مرتی ہوں۔ لیکن یہ فیصلہ نہیں کرسکتی کہ وہ میرے کیا لگتے ہیں، میں انہیں اپنا معشوق سمجھوں یا عاشق، باپ تصور کروں یا بیٹا یا شوہر۔ یہ فیصلہ کرنا میرے لئے مشکل ہے۔ بہرحال میں ان کو […]

· 0 comments · تاریخ
ہندوستانی معاشرہ اور انگریزی اقتدار

ہندوستانی معاشرہ اور انگریزی اقتدار

ڈاکٹر مبارک علی اگر کوئی معاشرہ دنیا سے الگ تھلگ رہے تو وہ اپنی روایات اور اقدار کو جامد بنادیتا ہے۔ اگر اس کا رابطہ او رتعلق دنیا کے دوسرے معاشروں سے رہے اور وہ ان کی تہذیبی وثقافتی اقدار سے متاثر ہوتو اس میں ہمیشہ تغیر وتبدل رہتا ہے اور اس کی فکری ترقی کی راہیں کشادہ رہتی ہیں۔ […]

· 1 comment · تاریخ
فیض کے بارے میں ایک گفتگو

فیض کے بارے میں ایک گفتگو

عبداللہ ملک آج رجعت پسند اتنے بانجھ ہوگئے ہیں کہ اب ان کے ہاں نہ کوئی شاعر پیدا ہوسکتا ہے نہ مفکر جس کے ذریعے وہ لوگوں کو اپنی طرف متوجہ کرسکیں۔ اس لئے آج وہ فیض کو’’انسان دوست‘‘ ’’شریف النفس‘‘ اور ’’مومن‘‘ بناکر پیش کرنے پر مجبور ہیں۔ ان کا مقصد ہی دراصل یہ ہے کہ فیض کی انقلاب […]

· 2 comments · تاریخ
پاکستان کے پہلے وزیر قانون جوگندر ناتھ منڈل کا استعفیٰ

پاکستان کے پہلے وزیر قانون جوگندر ناتھ منڈل کا استعفیٰ

انگریزی سے ترجمہ: عابد محمود دوسراو آخری حصہ محترم وزیراعظم آشوب فروری کی وجوہات:۔ ۔(18)۔یہ ذہن میں رہے کہ مغربی بنگال میں ہونے والے چند فرقہ وارانہ واقعات جو کلشیرہ سانحے کے ردعمل کے طور پر ہوئے کی داستانیں مشرقی بنگال کے پریس میں بڑھا چڑھا کر شائع کی گئیں۔ فروری1950ء کے دوسرے ہفتے میں جب مشرقی بنگال اسمبلی کا […]

· 0 comments · تاریخ