Archive for July 23rd, 2018

شرفا بازاری زبان کیوں بولتے ہیں

شرفا بازاری زبان کیوں بولتے ہیں

بیرسٹر حمید باشانی شائستگی کہاں گئی۔ تہذیب و اخلاق کیا ہوئے؟ شرفا حیران ہیں، اہل زبان پریشان ہیں۔ بہت لوگوں کو اس پر افسوس ہے کہ ہماری سیاست سے شائستگی کم ہوتی جا رہی ہے۔ کچھ قومی لیڈر جن الفاظ میں ایک دوسرے کو یاد فرماتے ہیں، جن القابات سے نوازتے ہیں، وہ حیران کن اور افسوسناک ہے۔  یہ صرف […]

· 0 comments · کالم
زباں بگڑی سو بگڑی خبر لیجئے دہن بگڑا

زباں بگڑی سو بگڑی خبر لیجئے دہن بگڑا

طارق احمدمرزا خبر ہے کہ الیکشن کمیشن نے نازیبا زبان کے استعمال پر مولانا فضل ا لرحمٰن ،ایاز صادق اور پرویزخٹک کو حلف نامہ جمع کروانے کا حکم دیا ہے۔چیف الیکشن کمشنر نے پرویزخٹک کے وکیل سے سوال کیا کہ پرویزخٹک نے پشتو میں تقریر کی ،کیا آپ نے سنی ہے؟ وہ ہنسنے کی نہیں رونے کی بات ہے۔پرویز خٹک […]

· 0 comments · کالم
مارکسی آفاقیت کی اَضافی نوعیت

مارکسی آفاقیت کی اَضافی نوعیت

تحریر وتحقیق:جہانزیب کاکڑ مارکسی آفاقیت کی اَضافی نوعیت Relative nature of Marxist universality مطلق آفاقیت کے مابعدُالطبیعاتی(metaphysical) نظریے کی نفی کرتے ہوئے مارکسزم آفاقیت کی اَضافی نوعیت پر زور دیتا ہے۔اِسکی رو سے خالص،غیر مشروط اور تضاد سے پاک آفاقیت کا کوئی وجود نہیں–ہر شئے,مظہر اور نظام بہم تبدیل ہوتے ہوئے اندرونی اور بیرونی رابطوں کے متضاد رشتوں پر مبنی […]

· 0 comments · علم و آگہی