کوئی گِھندے میڈے پاک فوجی، قَسمِ خُدا دی میں سارے وچینداں

 

کوئی گِھندے میڈے پاک فوجی، قَسمِ خُدا دی میں سارے وچینداں

ایک سرائیکی شاعر کی عوامی شاعری

سرائیکی دھرتی کے شاعر نذیر فیض مگی صاحب کہہ رہے ہیں کہ “ہے کوئی پاک فوجیوں کو لینے والا، خُدا کی قسم میں سب کو بیچنے کے لیے تیار ہوں “۔

مگی صاحب اُدھار پر یہ لُوٹ سیل کیوں لگانا چاہتے ہیں اور اپنا ناکارہ مال کس کو بیچنا چاہتے ہیں

2 Comments

  1. Pingback: نذیر احمد فیض۔۔۔سرائیکی کا فیض – Niazamana

  2. کوئی خریدے گا میرے پاک فوجی
    قسم خدا کی سارے بیچتا ہوں
    بوٹ، وردیاں، ٹوپیاں اور پیٹاں
    بندوقیں ساری، سارے طیارے بیچتا ہوں
    سرگودھا بھی ساتھ دینا ہے اور پنڈی بھی
    لاہور کے سارے فوارے بیچتا ہوں
    رقم پاس نہیں تو بھی کوئی حرج نہیں
    کوئی خریدے تو سہی میں ادھار بیچتا ہوں
    کیوں بیچنے ہیں ؟؟؟؟
    اِدھر بچے بھوکے اُدھر ضرورتوں سے زیادہ
    غلط تقسیم کیئے گئے اثاثے بیچتا ہوں
    روزی روٹی قسمت کی مگر آج ہی الگ ہونا ہے
    شاید مجھے مولا سدھار دے اس لئے بیچتا ہوں
    مگر ایک شرط ہے کوئی دشمن خریدے !!!
    کوئی دوست ان کو خریدنے کا نہ سوچے
    اگر خریدے تو انکو کھلائےاور خود بھیک مانگے

    شاعر نذیر فیض مگی
    راجن پور

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *